Ads (728x90)


نارووال  وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کی اپیل پر عالمی امن ایوارڈ یافتہ ملالہ یوسف زئی کی صحت یابی کے لئے یوم دعا بھر پوطریقہ سے منایا گیا اور نارووال کے تمام پرائیویٹ و سرکاری تعلیمی اداروں۔دفاتراور مساجد میں ملالہ یوسف زئی کی صحت یابی کے لئے خصوصی دعائیں کی گئیں۔تعلیمی اداروں میں اساتذہ اور طلبہ و طالبات نے خصوصی دعائیہ تقریبات کا انعقاد کیا۔نماز جمعہ کے اجتماعات میں علمائ اکرام و خطیب حضرات نے دہشتگردوں کی طرف سے ملالہ یوسفزئی پر قاتلانہ حملہ میں اسے شدید زخمی کرنے کی پر زور مذمت کی اور اسے بزدلانہ کارروائی قرار دیا۔انہوں نے کہا کہ ملالہ پر حملہ پوری قوم پر حملہ ہے ملالہ یوسفزئی پوری پاکستانی قوم کی بیٹی ہے اور اس کے لئے پوری قوم دعا گو ہے ۔تمام مکاتب فکر کے علمائ کو اس ضمن میںخاموش نہیں رہنا چاہیے۔یہ اہک شرم ناک فعل ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے بعدازاں ملالہ کی صحتیابی کے لئے دعائیں کی گئیں۔نماز جمعہ کے بعد سنی اتحاد کونسل اور جماعت اہلسنت کے کارکنوں نے دہشتگردوں کی طرف سے ملالہ یوسفزئی پر قاتلانہ حملہ میں اسے شدید زخمی کرنے کے خلاف ریلوے روڈ پر مظاہرہ کیا۔ جمعة المبارک کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے علامہ یقوب رضوی اورعلامہ پیر محمد تبسم بشیر اویسی نے کہاملالہ پر حملہ پوری قوم کی بیٹیوں پر حملہ ہے ۔اسلام تعلیم نسواں کا علمبر دار ہے ۔دہشت گرد ظالمان ملک و قوم کی بدنامی کا کوئی موقعہ ہاتھ سے نہیں جانے دیتے ۔تحفظ ناموسِ رسالت ﷺ پر عاشقانِ رسول ﷺ کے مظاہروں نے اسلام دشمنوں کا منہ بند کر دیا ۔اب وہ اپنے ایجنٹوں سے قوم کی بیٹی پر حملہ کروا کر پاکستانی حکومت و عوام کو بدنام کرنے کی سازش کرنا چاہتے ہیں ۔پوری قوم ملالہ یوسف زئی کے لئے دُعا گو ہے ۔مراکز صحت ،سکول اور مدارس و مساجد پر حملہ کرنے والے کس اسلام کا پرچار کر رہے ہیں؟ عورت پر حملہ بزدل اور ناکام لوگ کرتے ہیں۔ فرقہ واریت کا خاتمہ کر کے ہم ظالمان اور ان کے غیر ملکی آقاﺅں کی سازشوں کو ناکام بنا سکتے ہیں۔حصول علم و فروغ علم کے لئے پاکستانی قوم کی ہر بیٹی ملالہ یوسف زئی بنے گی۔ ظالمان سن لیں! ملالہ نے سیدہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہ اور صحابیات کی سنت کو زندہ کرتے ہوئے تعلیمی اداروں کی ترقی ، قوم کی بیٹیوں میں حصولِ علم کا شعور بیدار کرنے اور معاشرہ کی تنگ نظری کے خلاف علم جہاد بلند کیا ہے ۔ پاکستان کو شد ت پسندوں کے نرغے سے نجات دلانے کے لئے حکومت ضلعی سطح پر تمام مکاتب فکر و مسالک اور سول سوسائٹی کی آل پارٹیز کانفرنس منعقد کروا کر تجاویز لے ۔انہوں نے کہا کہ ہمیں اجتماعی توبہ و استغفار سے اپنے اللہ کو راضی کرنے کی ضرورت ہے ۔ اللہ تعالیٰ پاکستانی قوم کی دعائیں قبول کرےگا اور ملالہ یوسف زئی پھر اپنے علاقہ میں صحت و تندرستی کے ساتھ علم کے چراغ روشن کرے گی ۔حامیان اسلام کو ملالہ پر فخر ہے اور قوم کی تمام بیٹیوں کو ملالہ کی طرح علم کی شمعیں روشن کر کے جہالت کی تاریکی دور کرنا چاہئے۔

ایک تبصرہ شائع کریں