Ads (728x90)


پانچ تا تیرہ ستمبر کو ماسکو میں ہونے والے فیسٹیول "سپاسکایا باشنیا-2015" میں دنیا کے بہترین آرمی بینڈز شریک ہیں۔

یہ فیسٹیول گذشتہ آٹھ سالوں سے ہو رہا ہے اور تب سے اب تک خزاں کے اوائل میں ماسکو میں ہونے والے بھرپور اور قابل توجہ واقعات میں سے ایک شمار ہوتا ہے۔ اس بار اس میں پاکستان کی مسلح افواج کا مشترکہ بینڈ " ٹرائی سروس بینڈ پاکستان" شریک ہے۔ پاکستانی وفد کے سربراہ بریگیڈیر حامد نے روسی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا: " ہمیں خوشی ہے کہ ہمارا بینڈ روس کے بینڈ کے فورا" بعد اپنے فن کا مظاہرہ کرتا ہے۔ اس بار ہمارے وفد میں شامل افراد کی تعداد بہت زیادہ ہے۔ اس میں 79 سازندے اور فنکار ہیں۔ ان کے فن کو ناظرین توجہ اور دلچسپی کے ساتھ دیکھتے اور سنتے ہیں۔ اس میں پاکستان کے ترانے کی دھن اور علاقائی گیتوں کی دھنیں بجائی جاتی ہیں۔ لوگوں کی خواہش کے پیش نظر ہمارے بینڈ نے روس کی مقبول دھنیں اور معاصر روسی گیتوں کی دھنیں بھی اپنے پروگرام میں شامل کی ہیں۔ ہمیں بہت اضطراب تھا کہ لوگوں کا ہمارے بینڈ کے اس پروگرام پر کیا ردعمل ہوگا لیکن ہم کھل اٹھے جب لوگوں نے تعریف کرنے کے لیے تالیاں پیٹیں۔ دیکھنے والے روسی مسکرا رہے تھے اور ان کی نگاہیں ہمارے سازندوں کے چہروں پر گڑی تھیں۔"

پاکستان کا فوجی بینڈ ہر روز ماسکو کے مرکزی چوکوں اور پارکوں میں اپنے فن کا مظاہرہ کر رہا ہے۔ وہ اپنی رنگین وردیوں اور پاکستانی دلفریب دھنوں کی وجہ سے مسلسل روسی عوام کی توجہ کا مرکز بنا ہوا ہے۔ خاص توجہ سازندوں کے ہاتھوں میں موجود پاکستان کے مقامی ساز جیسے کہ شہنائی لے رہے ہیں۔

فیسٹیول کے سربراہ اور معروف روسی فوجی موسیقار لیفٹیننٹ جنرل ولیری خلیلوو کا کہنا ہے کہ مشق کرتے ہوئے پاکستانی سازندوں نے آسانی کے ساتھ ہمارے ساتھ تال میل کر لیا۔ پاکستان کے وفد میں ماہر فنکار ہیں۔ ہم جلد ہی ایک دوسرے کو سمجھنے لگے تھے۔ پاکستان کے آرمی بینڈ کو سننے والے بے حد سراہتے ہیں۔

فیسٹیول کے پروگراموں سے فراغت کے اوقات میں پاکستانی بینڈ کے اراکین ماسکو کے قابل دید مقامات سے لطف اندوز ہو رہے ہیں۔ بینڈ کے ہدایتکار صوبیدار میجر غلام علی بتاتے ہیں کہ ہم میں سے ہر ایک نے ریڈ سکوائر، بالشوئے تھیٹر اور دیگر قابل دید حسین عمارات کے سامنے کھڑے ہو کر کھینچی گئی تصاویر اپنے عزیزوں کو پوسٹ کی ہیں۔

تیرہ ستمبر کو پاکستان کا آرمی بینڈ، ایشیا، یورپ اور امریکہ کے دیگر آٹھ آرمی بینڈز کے ساتھ ایک بار پھر ریڈ سکوائر پر اپنے فن کا مظاہرہ کرے گا۔ ہم جانتے ہیں کہ اختتامی پروگرام شاندار ہوگا جس میں لیزر شو اور آتشبازی کا شاندار مطاہرہ بھی شامل ہوگا، ٹرائی سروس بینڈ پاکستان کے سربراہ بریگیڈیر حامد نے کہا۔


ایک تبصرہ شائع کریں